Ali Ghaznavi (49)

کوئی زندگی کی آزمائشوں سے گزرا کوئی عشق کا روگ لگا بیٹھا کوئی قلم سے درد لکھنے لگا کوئی شاعر خود کو بنا بیٹھا

Earth Joined July 2018

Blog


Hide resteems